زندہ دفن کر دی گئی بیٹیوں کے نام

نظم نگار : اسلم حسن

جب کھینچ لی جائے گی آسمان کی خال
اور سورج سوا نیزے پر آجائے گا
جب اونٹنیاں بِل بِلائیں گی اور
پہاڑ روئی بن جائے گا
جب ماں انکار کر دے گی اپنے بیٹوں کو
پہچاننے سے
تب اُس قیامت کے دن اللہ مانگے کا حساب
زندہ دفن کر دی گئی
بیٹیوں سے پوچھا جائے گا
بتائو تمہیں کس جُرم کی
سزا دی گئی تھی
تب اُس انصاف کے دن
میری بیٹیوں تم توڑ دینا اپنے اپنے
صبر کا باندھ
شاید خدا کے سامنے
حشر کا میدان پانی پانی ہوجائے

Share This Post
2 Comments
  1. نظم میں قرآن کے سورہ التکویر کی تفسیر کا پرتو صاف دیکھا جا سکتا ہے

    Reply
  2. اللہ مانگا گا حساب
    اللہ مانگے کا حساب نہیں

    Reply

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

You may use these HTML tags and attributes: <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong>